دیوبندی مذہب: طاق راتوں میں اجتماعی عبادت اور نمازِ عید کے بعد مصافحہ اور گلے ملنا بدعت ہے

in Tahaffuz, August-September 2014, آ ئينہ کيو ں نہ دوں

Deobandi Religion: odd nights of worship and prayer group hug after the handshake and innovation Deobandi Religion: odd nights of worship and prayer group hug after the handshake and innovation

٭ یہ فتویٰ دیوبندیوں کی مرکزی درس گاہ دارالعلوم دیوبند کا ہے جس میں ماہِ رمضان کی طاق راتوں میں اجتماعی عبادات اور نمازِ عید کے بعد مصافحہ اور گلے ملنے کو بدعت کہا گیا۔
اس سے معلوم ہوا کہ پوری دنیا کے کروڑوں مسلمان جوکہ طاق راتوں میں اجتماعات میں شرکت کرتے ہیں اور عید کے دن مصافحہ اور گلے ملتے ہیں، وہ سب دیوبندی مذہب کے نزدیک بدعتی ہیں۔
دارالعلوم دیوبند کے اس فتوے کی زد میں ان کے اپنے ہی فرقے کے لوگ بھی آگئے جوکہ پورے ملک میں طاق راتوں اور شب قدر کے اجتماعات منعقد کرتے ہیں اور عید کے دن گلے بھی ملتے ہیں، وہ سب اس فتوے کی زد میں آکر بدعتی ٹھہرے۔
ہمارے سوالات:
٭
٭ سو سالہ جشن دارالعلوم دیوبند منانا اور بڑا اجتماع منعقد کرنا کہاں سے ثابت ہے؟
٭ ختم بخاری کے اجتماعات، سالانہ دستار بندی کے اجتماعات منعقد کرنا کہاں سے ثابت ہیں؟
٭ نکاح کے بعد دولہے سے گلے ملنا کہاں سے ثابت ہے؟
٭ اپنے مہمانوں سے گرم جوشی کے ساتھ گلنے ملنا کہاں سے ثابت ہے؟
دارالعلوم دیوبند جواب دے یا بدعتی بننے کے لئے تیار ہوجائے…!!!