تبصرۂ کتب

in Tahaffuz, July 2012, متفرقا ت

کتاب کا نام:
سنہری سیرت (بچوں کیلئے سیرت النبیﷺ)
جلد: اول و دوم)    صفحات: حصہ اول (192) حصہ دوم (208)
تالیف و ترتیب: محمد اسماعیل بدایوانی، گولڈ میڈلسٹ
ہدیہ دو جلد: 450    ناشر: اسلامک ریسرچ سوسائٹی کراچی
تبصرہ: محترم محمد اسماعیل بدایونی صاحب قارئین ماہنامہ تحفظ کے لئے کوئی نئے مصنف نہیں، ماہنامہ تحفظ میں ان کے کئی مضامین شائع ہوچکے ہیں۔ آپ نے کئی عنوانات پر مضامین لکھے مگر اب ایک اہم ضرورت کو محسوس کرتے ہوئے آپ نے بچوں کے لئے بھی سیرت النبیﷺ کے عنوان سے کتاب لکھی۔ الحمدﷲ اس کتاب میں آپ نے بڑے دلچسپ انداز میں سیرت پر مبنی ایمان افروز واقعات تحریر کئے ہیں۔ حضورﷺ کی ولادت سے قبل کے واقعات سے لے کر وصال تک کے تمام تر حالات بیان کئے ہیں۔
بچوں کی یہ عادت ہوتی ہے کہ وہ فارغ اوقات اور خصوصاً سونے سے قبل بستر پر اپنے والدین سے ضد کرتے ہیں کہ آپ ہمیں کہانیاں سنائیں ،پھر والدین علم کی کمی کی وجہ سے وہ کہانیاں سناتے ہیں جس کے بچوں کی زندگی پر کوئی اچھے اثرات مرتب نہیں ہوتے۔ ایسے والدین سے عرض ہے کہ وہ سیرت کے اس سیٹ کو خریدیں اور اس میں موجود دلچسپ اور ایمان افروز واقعات اپنے بچوں کو سنائیں۔ یاد رکھئے ان واقعات کے اچھے اثرات پوری زندگی بچوں کے ذہنوں میں نقوش بن کر رہیں گے۔
کتاب کا نام:
سنہری کہانیاں (قصص الانبیاء بچوں کیلئے)
صفحات:208    مصنف: محمد اسماعیل بدایونی
ہدیہ: 225    ناشر: اسلامک ریسرچ سوسائٹی کراچی
تبصرہ: اس کتاب میں مصنف نے بڑی محنت سے زمین پر انسانی زندگی کی ابتدا سے لے کر حضرات انبیاء کرام علیہم السلام کے ایمان افروز واقعات تحریر کئے ہیں، اس کے ساتھ ساتھ جن لوگوں نے اﷲ تعالیٰ کی نافرمانی کی، ان پر نازل ہونے والے عذابات کا بھی ذکر کیا ہے، یہ کتاب بچوں کے لئے بہت سبق آموز کتاب ہے۔ والدین اگر روزانہ بچوں کو ایک واقعہ سنائیں یا بچوں کو ایک واقعہ پڑھنے کی تاکید کریں تو بچوں کی زندگی میں انقلاب پیدا ہوسکتا ہے۔ فضول کہانیوں اور ناولوں سے ان کی جان چھوٹ سکتی ہے، مطالعہ میں رکھنے والی کتاب ہے۔
کتاب کا نام: سنہرے قصے (قصص القرآن بچوں کیلئے)
صفحات: 192    ہدیہ: 225
تالیف:محمد اسماعیل بدایونی    ناشر: اسلامک ریسرچ سوسائٹی کراچی
تبصرہ: مولف نے اس کتاب کو دو حصوں میں تقسیم کیا ہے۔ پہلے حصے میں قرآن مجید سے سبق آموز اور دلچسپ واقعات تحریر فرمائے ہیں اور دوسرے حصے میں ادب رسولﷺ اور گستاخان مصطفی کے عبرت ناک انجام تحریر کئے ہیں۔ ان واقعات کو اگر ہمارے بچے پڑھ لیں تو عشق مصطفیﷺ اور ادب مصطفیﷺ کی لازوال دولت ان کے سینوں میں موجزن ہوگی۔ یہی خالص مومن ہونے کی پہچان ہے۔ آپ اپنے بچوں کی اسلامی تربیت ان پیاری پیاری کتابوں سے کریں، اپنے بچوں، بھتیجوں، بھانجوں اور دوست احباب کے بچوں کو یہ کتابیں سالگرہ، امتحانات اور دیگر کامیابیوں کے موقع پر تحفتاً دیں تاکہ ہمارا بچہ یہ کتاب پڑھ کر فرمانبرداری کی راہ پر گامزن ہو۔
کتب ملنے کے پتے: یہ چاروں کتب ان پتوں سے باآسانی طلب کرسکتے ہیں:
٭ اسلامک ریسرچ سوسائٹی کراچی، 0332-2463260
٭ مکتبہ برکات المدینہ بہار شریعت مسجد بہادر آباد کراچی
٭ مکتبہ رضویہ گاڑی کھاتہ، آرام باغ کراچی
٭ مکتبہ قادریہ فیضان مدینہ مسجد پرانی سبزی منڈی کراچی
٭ ضیاء الدین پبلی کیشنز نزد شہید مسجد کھارادر کراچی
کتاب کا نام: ختم نبوت اور تحذیر الناس
صفحات: 508    تصنیف: سید بادشاہ تبسم بخاری
ناشر: ادارۂ اشاعت العلوم وسن پورہ لاہور
تبصرہ: محترم المقام سید بادشاہ تبسم بخاری نے اس کتاب میں مولوی قاسم نانوتوی کی کتاب تحذیر الناس کا زبردست رد بلیغ کیا ہے۔ مصنف نے اس کتاب کو لکھنے میں بڑی محنت کی ہے، جوکہ اس کتاب کو دیکھنے ہی سے واضح ہورہی ہے۔ مصنف نے اس کتاب میں دلائل و براہین کے انبار لگا دیئے ہیں بلکہ قاسم نانوتوی کی عبارت کا علمائے دیوبند ہی کی کتابوں سے رد کیا ہے۔ یہی نہیں بلکہ امام اہلسنت امام احمد رضا خان محدث بریلوی علیہ الرحمہ پر الزامات کے بھی دلائل کی روشنی میں جوابات دیئے ہیں۔ اپنے عنوان کی منفرد  کتاب ہے جس کی جتنی تعریف کی جائے، کم ہے۔ اس کتاب کے آخر میں مولوی قاسم نانوتوی کی اس عبارت کا اصل عکس بھی پیش کیا ہے جس میں اس نے کفریہ عبارت لکھی ہے۔
اﷲ تعالیٰ مصنف کو خوب برکتیں عطا فرمائے اور دین و دنیا کی بھلائیں عطا فرمائے۔ آمین
نوٹ: یہ کتاب سندھ اور پنجاب کے تمام کتب خانوں سے بارعایت حاصل کریں
کتاب کا نام: جہانیاں جہاں گشت
تحریر: پروفیسر ڈاکٹر سید محمد عارف    صفحات: 64
مرتب: ڈاکٹر اقبال احمد اختر القادری
ناشر: اسلامک ایجوکیشن ٹرسٹ، رضا لائبریری، L318/5-B-2، نارتھ کراچی، کراچی
تبصرہ: یہ کتاب سفیر کتب اہلسنت، مخدوم اہلسنت محترم المقام حضرت مولانا صوفی محمد مقصود حسین قادری نوشاہی اویسی صاحب مدظلہ العالی کے حالات اور علمی و دینی خدمات پر مشتمل ہے۔ اس کتاب میں صوفی صاحب کی خدمات کو اہلسنت کی قد آور شخصیات نے زبردست خراج تحسین پیش کیا ہے جن میں برصغیر کے سب سے بڑے مصنف مفسر قرآن حضرت علامہ مولانا مفتی فیض احمد اویسی علیہ الرحمہ، رئیس التحریر مسعود ملت حضرت علامہ مولانا پروفیسر ڈاکٹر مسعود احمد صاحب علیہ الرحمہ، حضور بقیۃ السلف حضرت علامہ مولانا مفتی محمد حسن علی میلسی صاحب، امین ملت حضرت قبلہ سید محمد امین میاں برکاتی، نبیرۂ اعلیٰ حضرت حضرت رضا خان یزدانی، مفتی عبدالمنان اعظمی صاحب، علامہ سید عارف شاہ اویسی اور حضرت مولانا شہاب الدین رضوی صاحب شامل ہیں۔
اس کے علاوہ جن چھ ہستیوں نے قبلہ صوفی صاحب کو سند خلافت عطا فرمائی، ان میں مفتی فیض احمد اویسی علیہ الرحمہ، علامہ عبدالحکیم شرف قادری علیہ الرحمہ، علامہ مفتی حسن علی میلسی، علامہ ڈاکٹر پروفیسر مسعود احمد صاحب علیہ الرحمہ، علامہ قادری رضاء المصطفیٰ اعظمی اور خواجہ محمد راشد خنونی چشتی شامل ہیں۔
قبلہ صوفی صاحب کیلئے سب سے بڑا شرف اس پرفتن دور میں یہی ہے کہ اﷲ تعالیٰ ان سے اپنے پاکیزہ دین کی خدمت لے رہا ہے۔ حقیقت یہ ہے کہ قبلہ صوفی مقصود احمد اویسی صاحب واقعی خراج تحسین کے مستحق ہیں۔
اﷲ تعالیٰ سے دعا ہے کہ صوفی صاحب کی خدمات کو اپنی بارگاہ میں قبول فرمائے۔ ان کو صحت و عافیت عطا فرمائے اور خدمت دین پر استقامت عطا فرمائے۔ آمین ثم آمین